سلمان خان کی جانب سے ٹھکرائی گئیں 6 سپرہٹ فلمیں

سلمان خان کی جانب سے ٹھکرائی گئیں 6 سپرہٹ فلمیں

1995 میں ریلیز ہوئی فلم ''دل والے دلہنیا لے جائیں گے'' بھارتی سینما کی بلاک بسٹر فلم ہے جو آج تک تھیٹر میں دکھائی جارہی ہے۔ اس فلم میں شاہ رخ خان اور کاجول نے مرکزی کردار ادا کیے تھے۔  بھارتی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق فلم کے ہدایت کار آدیتیہ چوپڑا اس فلم میں سیف علی خان یا پھر سلمان خان کو مرکزی کردار کے لیے کاسٹ کرنا چاہتے تھے۔ تاہم ان دونوں اسٹارز نے فلم ٹھکرادی اور اس طرح ''راج'' کا مقبول ترین کردار شاہ رخ خان کے حصے میں آیا۔فلم ''گجنی'' 2008 کی بلاک بسٹر فلم تھی اس میں عامر خان نے سنجے سنگھانیا کا مرکزی کردار ادا کیا تھا۔ یہ بات بہت کم لوگ جانتے ہیں کہ عامر خان نے یہ فلم کرنے سے قبل سنجے سنگھانیا کے کردار کے لیے سلمان خان کا نام تجویز کیا تھا۔ لیکن سلمان خان نے اس فلم کو کرنے سے انکار کردیا تھا۔شاہ رخ خان، سیف علی خان اور پریتی زنٹا کی 2003 میں ریلیز ہوئی سپر ہٹ فلم ''کل ہو ناہو'' کو کون بھول سکتا ہے۔ بھارتی میڈیا کے مطابق اس فلم میں سیف علی خان والا کردار پہلے سلمان خان کو آفر ہوا تھا۔ 2007 میں ریلیز ہوئی فلم ''چک دے انڈیا'' شاہ رخ خان کے کیریئر کی یادگار فلم ہے جس میں کنگ خان نے ہاکی کوچ کا کردار اتنے بہترین انداز میں نبھایا ہے کہ ایسا لگتا ہے یہ کردار بنا ہی ان کے لیے تھا۔ لیکن شاہ رخ سے قبل کبیرخان کے کردار کی سلمان خان کو پیشکش ہوئی تھی۔1993 میں ریلیز ہوئی فلم ''بازیگر'' نے شاہ رخ خان کے کیریئر کو نہ صرف اونچائیوں پر پہنچایا بلکہ انہیں بالی ووڈ میں منفرد پہچان دلائی۔ فلم ''بازیگر'' میں شاہ رخ خان نے ہیرو کے بجائے منفی کردار کے ذریعے لوگوں کے دل جیتے اور یہ فلم کے ان کے شاندار کیریئر میں بہت اہم ثابت ہوئی۔ شاہ رخ خان سے پہلے یہ فلم سلمان خان کو آفر ہوئی تھی.2000 میں ریلیز ہوئی فلم ''جوش'' میں مرکزی کردار شاہ رخ خان نے ادا کیا تھا اور ایشوریا رائے نے ان کی بہن کا کردار ادا کیا تھا۔ شاہ رخ خان سے پہلے یہ فلم بھی سلمان خان کو آفر ہوئی تھی لیکن بزی شیڈول کی وجہ سے وہ یہ فلم بھی نہ کرسکے۔