بیٹی کے روپ میں جیل سے فرار کی ناکام کوشش کرنے والا مجرم

بیٹی کے روپ میں جیل سے فرار کی ناکام کوشش کرنے والا مجرم

میکسیکو میں بدنام زمانہ منشیات فروش لارڈ Joaquín “El Chapo” Guzmánنے 2015 میں جیل سے بھاگنے میں کامیابی حاصل کی، تو وہ کسی فلمی کہانی سے کم نہیں تھا، کیونکہ اس کے لیے اسے ایک میل لمبی سرنگ، لاکھوں ڈالرز رشوت اور ایک نجی طیارے کی ضرورت پڑی ، جو اسے دور دراز مقام پر لے گیا۔

مگر برازیل میں کے بدنام گینگ لیڈر نے جب جیل سے بھاگنے کا منصوبہ بنایا تو اس نے صرف ایک سلیکون ماسک، لڑکیوں کے لباس اور وگ کو ہی کافی سمجھا اور عین وقت پر پکڑا گیا۔

 

جی ہاں برازیلین مجرم کلایوینو ڈی سلوا جسے شارٹی کی عرفیت سے زیادہ جانا جاتا ہے، نے اپنی 19 سالہ بیٹی کا بہروپ بدل کر جیل سے فرار ہونے کی کوشش کی۔

ایسوسی ایٹڈ پریس کی رپورٹ کے مطابق ریو ڈی جنیرو کے مغربی حصے میں واقع جیل کے حکام نے شارٹی کی اس کوشش کو ناکام بنایا۔

ریڈ کمانڈ نامی گروپ میں شامل رہنے والے 42 سالہ کلایوینو کو 73 سال قید کی سزا سنائی گئی تھی اور اس نے فرار کے منصوبے کے لیے بیٹی کو اپنی جگہ چھوڑا اور اس کے روپ میں باہر کی جانب چل پڑا۔

 

ظاہر وہ جیل حکام کو دھوکا دینے میں بھی کامیاب ہوگیا کیونکہ اسے صرف اس لیے روکا گیا کیونکہ وہ بہت زیادہ نروس نظر آرہا تھا۔

ریو ڈی جنیرو کے جیل خانہ جات کے سیکرٹری کی جانب سے ویڈیو بھی جاری کی گئی جس میں مجرم بہروپ اتارتے ہوئے حکام کو اپنا اصل نام بتارہا ہے۔

ب پویس تحقیقات کررہی ہے کہ کیا کلایوینو کی بیٹی بھی اس فرار کی ناکام کوشش کا حصہ تھی یا نہیں۔

دوسری جانب کلایوینو کو اب زیادہ سیکیورٹی والی جیل میں منتقل کردیا گیا ہے۔

ویسے یہ اس کی جانب سے فرار کی پہلی کوشش نہیں، اس سے پہلے 2013 میں وہ اسی جیل سے گٹر کے راستے فرار ہوگیا تھا مگر پھر پکڑا گیا تھا 

تصاویر میں اس کی جانب سے استعمال کی گئی وگ، ماسک، گلاسز اور گلابی رنگ کی ٹی شرٹ کو دکھایا گیا ہے۔