سکھونت ٹھیٹھی کی جانب سے سکھ مذہب سے تعلق رکھنے والے شہری پر نسلی تعصب پر مبنی حملے کی شدید مذمت

سکھونت ٹھیٹھی کی جانب سے سکھ مذہب سے تعلق رکھنے والے شہری پر نسلی تعصب پر مبنی حملے کی شدید مذمت

اونٹاریو لبرل پارٹی کے برامپٹن سائوتھ سے امیدوار سکھونت ٹھیٹھی کی جانب سے اوٹاوا کے شاپنگ سینٹر میں سکھ مذہب سے تعلق رکھنے والے شہری پر نسلی تعصب پر مبنی حملے کی شدید مذمت کی ہے۔اپنے مذمتی بیان میں انکا کہنا تھا کہ اونٹاریو کے دوسرے لوگوں کی طرح میرے لئے بھی اس نوعیت کانسلی امتیاز پر مبنی حملہ انتہائی دکھ کا باعث بنا ۔حملہ آوروں نے داڑھی ، پگڑی اور رنگت کی بنیاد پر خصوصی طور پر اس شخص کو نشانہ بنایا۔بزدل حملہ آوروں نے حملے سے قبل مذکورہ شخص کے عقیدے اور نسل بارے تصدیق کی اس کے بعد اس کے سامنے چھری لہرائی گئی۔معصوم شخص کو زدو کوب کیا گیا،اسے دھمکی دی گئی، اس سے سامان چھین لیا گیا اور اس کے بعد حملہ آوروں نے اس شخص کی تضحیک کی۔ حملہ آوروں نے زبردستی معصوم شخص کی پگڑی اتار دی جو سکھ مذہب کے ماننے والوں میں انتہائی اہمیت کی حامل ہے۔گزشتہ دو سالوں کے دوران خصوصا امریکی صدر ٹرمپ کی طرح کے سیاستدانوں کی کامیابی کے بعد سے نسلی امتیاز پر مبنی پرتشدد واقعات میں اضافہ ہوا ہے جس کے باعث کینیڈا اور امریکا میں بسنے والے شفیق اور مہذب افراد انتہائی تشویش میں مبتلا ہیں۔نفرت پھیلانے والے کینیڈا کیخلاف ہیں اور میں اس نفرت انگیز حملے کی شدید مذمت کرتا ہوں۔نفرت یا نفرت پر مبنی جرائم کی اونٹاریو میں کوئی گنجائش نہیں اور میں تمام عقائد، ثقافتوں، سیاسی نظریات کے حامل افراد کو دعوت دیتا ہوں کہ وہ میرے ساتھ نفرت کے خاتمے کیلئے کھڑے ہوں تاکہ ہم ملکر ایسے جرائم کی روک تھام کیلئے کام کریں۔