” فورڈ حکومت نے دی خوش خبری۔ ٹورنٹو اور پیل ریجن کے شعبہ تعلیم سے وابستہ افراد کی اگلے ہفتے سے ویکسینیشن شُروع“۔

” فورڈ حکومت نے دی خوش خبری۔ ٹورنٹو اور پیل ریجن کے شعبہ تعلیم سے وابستہ افراد کی اگلے ہفتے سے ویکسینیشن شُروع“۔

فورڈ حکومت نے بدھ کے روز اعلان کیا کہ، ٹورنٹو اور پیل ریجن کے وہ تمام لوگ جو تعلیمی شعبے سے تعلق رکھتے ہیں،  آئندہ ہفتے سے ویکسینیشن کے اہل ہوں گے۔ صوباٸ حُکّام نے یہ اعلان بدھ کی سہ پہر کوٸنز پارک میں ایک نیوز کانفرنس کے دوران کیا جہاں پریمیٸر ڈگ فورڈ نے اونٹاریو میں ایک اور ہنگامی حالت کا اعلان کرنے کے ساتھ ساتھ ایک ماہ تک اسٹے ایٹ ہوم کا حُکم بھی جاری کِیا۔ اونٹاریو کے وزیر تعلیم نے کہا کہ اسکول کھلے رکھنے سے کورونا وائرس کے پھیلاٶ میں بھی اضافہ ہوتا ہے اور اونٹاریو میں اساتذہ کی انجمنیں صوبے سے مطالبہ کررہی ہیں کہ وہ تعلیم کے شعبے کے ملازمین کو بھی ویکسین کی فہرست میں لے آٸیں۔ صوبے کا کہنا ہے کہ جیسے ہی ویکسین کی فراہمی ہُوٸ اساتذہ کی ویکسینیشن کر دی جائے گی جس میں یارک ریجن ، اوٹاوا ، ہیملٹن ، ہلٹن اور ڈرہم ریجن کے اساتذہ شامل ہیں۔ ٹورنٹو اور پیل ریجن کے اسکول فی الحال کم از کم 18 اپریل تک بند ہیں جب دونوں خطوں کے طبی افسران نے رواں ہفتے ہیلتھ پروموشن اینڈ پروٹیکشن ایکٹ کے تحت اپنے اختیارات استعمال کرتے ہوئے ذاتی طور پر تعلیمی عمل کو معطل کردیا تھا۔ کورونا کے زیادہ پھیلاٶ والے علاقوں میں 18+ سال کی عمر کے لوگوں کی بھی ویکسینیشن کی جائے گی بدھ کے روز نیوز کانفرنس کے دوران حکام نے بھی اس بات کی تصدیق کی ہے کہ اس کے ویکسینیشن کے منصوبے کے دُوسرے مرحلے کے ایک حصے کے طور پر خطرے والے علاقوں میں رہنے والے لوگ ترجیحی فہرست میں سب سے زیادہ ہے۔ فورڈ نے بدھ کے روز کہا  ”موبائل ٹیمیں منظم کی جارہی ہیں تاکہ وہ ہر جگہ لوگوں کی ویکسینیشن کرسکیں۔ انہوں نے کہا  یہ ویکسین 18 سال یا اس سے زیادہ عمر کے لوگوں کو پیش کی جائے گی۔ صوبے نے کہا کہ سب سے زیادہ متاثرہ علاقوں میں پاپ اپ کلینک بھی قائم کیے جائیں گے۔ فورڈ نے کہا کہ انہیں یقین ہے کہ اگر اونٹاریو نے وفاقی حکومت سے ویکسین وصول کرنا جاری رکھا تو اونٹاریو میں 40 فیصد بالغ افراد کو اپریل کے آخر تک اپنی پہلی خوراک مل چکی ہوگی۔