حسن علی ویسٹ انڈیز کیخلاف ہوم گراؤنڈ پرکھیلنے کیلئے پرجوش

حسن علی ویسٹ انڈیز کیخلاف ہوم گراؤنڈ پرکھیلنے کیلئے پرجوش

می پیسر حسن علی ویسٹ انڈیز کیخلاف ہوم گراؤنڈ پر کھیلنے کیلئے پرجوش ہیں جن کا کہنا ہے کہ حریف بیٹسمینوں کو قابو کرنے کیلئے ابھی کوئی حکمت عملی نہیں بنائی البتہ ایک دو دن میں بالنگ کوچ اظہر محمود کے ساتھ مل کر پلان مرتب کریں گے۔گزشتہ روز نیشنل اسٹیڈیم میں میڈیا سے گفتگو میں ان کا کہنا تھا کہ وہ اب بالکل ٹھیک ہیں اور فٹنس کا کوئی ایشو نہیں ہے کیونکہ پی ایس ایل میں شرکت کے بعد انہوں نے اپنی ٹریننگ جاری رکھی ہوئی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ویسٹ انڈیز اچھی ٹیم ہے جس کے پاس جارحانہ انداز سے کھیلنے والے بیٹسمین موجود ہیں جن کو آسان نہیں سمجھیں گے اور بہترین کرکٹ کھیلنے کی کوشش ہو گی۔ویسٹ انڈیز کی پاکستان آمد کو خوش آئند اقدام قرار دیتے ہوئے قومی پیسر کا کہنا تھا کہ نو سال کے بعد کراچی میں انٹرنیشنل میچز ہوں گے اور ان سمیت کئی پاکستانی کھلاڑیوں کو اپنے ہوم گراؤنڈ پر کھیلنے کا موقع ملے گا جس کیلئے ان سمیت تمام کھلاڑی پرجوش ہیں۔ حسن علی کا کہنا تھا کہ وہ انجری کے سبب کچھ عرصے تک ٹیم سے باہر رہے لہٰذا ردھم کی واپسی کیلئے انہیں تین سے چار میچز درکار تھے جو انہیں پی ایس ایل میں مل گئے اور اب امید ہے کہ ویسٹ انڈیز کیخلاف ان کی کارکردگی اچھی رہے گی۔ان کا کہنا تھا کہ اسٹرائیک بالر کی حیثیت سے کھیلنے کا اپنا دباؤ ہوتا ہے لیکن وہ میچ کے دوران اپنے اعصاب قابو میں رکھتے ہیں اور کراچی کی خشک کنڈیشنز میں پیسرز کیلئے حالات سخت ہونے کے باوجود وہ بہتر کھیل پیش کریں گے کیونکہ ماحول کیسا بھی ہو کھلاڑی کو کارکردگی دکھانا ہی ہوتی ہے۔ انہوں نے پی ایس ایل سے آنے والے نئے ٹیلنٹ کی قومی ٹیم میں شمولیت پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ان میں سے کسے موقع دیا جائے اس کا فیصلہ ٹیم انتظامیہ کرے گی۔