” اونٹاریو کے حالات فی الحال اسٹے ایٹ ہوم آرڈر ختم کرنے کے قاپل نہیں ہے اور حکومت کو لاک ڈاؤن میں توسیع کرنا چاہئے، او ایم اے “۔

” اونٹاریو کے حالات فی الحال اسٹے ایٹ ہوم آرڈر ختم کرنے کے قاپل نہیں ہے اور حکومت کو لاک ڈاؤن میں توسیع کرنا چاہئے، او ایم اے “۔

اونٹاریو میڈیکل ایسوسی ایشن (او ایم اے) کا کہنا ہے کہ یہ اونٹاریو میں اسٹے ایٹ ہوم آرڈر کو ختم کرنے کے لئے وقت نہیں ہے اور اسے 20 مئی سے لاک ڈاون میں مزید توسیع کرنا چاہئے۔ او ایم اے نے کہا کہ روزانہ کووڈ-19 کے نئے کیسوں کی تعداد اور اسپتال میں داخل لوگوں کی تعداد کے پیش نظر اس وقت پابندیاں ختم کرنا انتہاٸ غیر محفوظ ہے۔ تنظیم کا خیال ہے کہ لوگوں کی ذہنی اور جسمانی صحت کو بہتر بنانے کے لیۓ بیرونی تفریحی سرگرمیوں جیسے گولف ، ٹینس اور باسکٹ بال کی کچھ پابندیوں کو ختم کیا جانا چاہئے۔ او ایم اے کی صدر ڈاکٹر سمانتھا ہل نے بدھ کے روز ایک بیان میں کہا ، "ہم سب چاہتے ہیں کہ تیسری لہر آخری لہر ہو۔ "کوئی بھی جلد ہی پابندیاں نافذ کرنا نہیں چاہتا ہے لیکن صرف اس وائرس کے پھیلنے کے باعث شاید ہمیں دوبارہ لاک ڈاؤن میں جانا پڑے۔" ہل نے کہا کہ 20 مئی کو اسٹے ایٹ ہوم کے حکم میں توسیع سے ان امکانات میں اضافہ ہوجائے گا کہ اونٹارینز کو موسم گرما میں بہت کم پابندیوں کا سامنا ہوسکتا ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ ان پابندیوں کے نتیجے میں اونٹاریو میں زندگی جلد ہی معمول پر آنے کا امکان ہے۔ 
             او ایم اے نے کہا کہ لاک ڈاؤن کی توسیع  کا انحصار مختلف عوامل پر  ہے ، جس میں یہ بھی شامل ہے کہ کتنے لوگوں کی ویکسینیشن کی جاتی ہے اور کب۔ او ایم اے کے سی ای او ایلن او ڈیٹیٹ نے کہا ، "لوگ پابندیوں سے ہٹ گئے ہیں جو صرف چند ہفتوں بعد حالات کے پیش نظر دوبارہ لگائی گئیں۔" "یہ معیشت کے لئے مشکل ہے اور لوگوں کی روزی روٹی اور ذہنی صحت کے لیۓ بہت سخت ہے۔" اس ہفتے کے شروع میں ، وزیر صحت کرسٹین ایلیٹ نے اشارہ کیا کہ اسٹے ایٹ ہوم کے آرڈر میں توسیع 20 مئی سے کی جائے گی لیکن انھوں نے یہ نہیں بتایا کہ یہ اعلان کب ہوگا۔ چیف میڈیکل آفیسر آف ہیلتھ ڈاکٹر ڈیوڈ ولیمز نے اس ہفتے کہا ہے کہ اونٹاریو میں پابندیاں کورونا کے یومیہ کیسز کو ایک ہزار سے کم ہونے تک برقرار رہنا چاہیٸں۔ "ہم چوتھی لہر نہیں چاہتے۔" ولیمز نے کہا۔