بریکنگ”ُ گرے ہاؤنڈ بس سروس کینیڈا میں  اپنا آپریشن ختم کرنے کو ہے“۔

بریکنگ”ُ گرے ہاؤنڈ بس سروس کینیڈا میں اپنا آپریشن ختم کرنے کو ہے“۔

گرے ہاؤنڈ کینیڈا نے تقریباً ایک صدی خدمات کے بعد کینیڈا میں انٹرسٹی بس کیریئر بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ موٹر کوچ کمپنی نے بتایا کہ اونٹاریو اور کیوبک میں اس کے باقی روٹ جمعرات کو مستقل طور پر ختم ہوجاٸیں گے۔ گرے ہاؤنڈ لائنز ، انکارپوریشن ، سرحد کے دوبارہ کھلنے کے بعد ٹورنٹو ، مونٹریال اور وینکوور کے سرحد پار راستوں پہ آپریشن جاری رکھے گی۔ یہ فیصلہ ایک سال بعد ہوا جب کووڈ 19 کی پہلی لہر کے دوران گرے ہاٶنڈ کینیڈا نے مسافروں میں تیزی سے کمی اور سفری پابندیوں کی وجہ سے عارضی طور پر تمام سروس معطل کردی تھیں۔ بس کیریئر سالوں سے گھٹتی سواری ، مقابلہ میں اضافے اور بے ضابطگیوں کے ساتھ جدوجہد کر رہا ہے۔ گرے ہاٶنڈ کینیڈا کے سینئر نائب صدر اسٹیورٹ کینڈرک نے کہا وبا کے دوران  فیئر بکس محصول کے مکمل نقصان نے کمپنی کو مستقل طور پر اپنی کاروائیاں روکنے پر مجبور کردیا۔ انہوں نے کینیڈا پریس کو ایک انٹرویو میں بتایا ، "یہ ایک بہت ہی سخت فیصلہ تھا جو ہم نے بھاری دل سے کیا ہے۔ انھوں نے کہا کہ گرے ہاٶنڈ بس سروس 90 سال سے زیادہ عرصے سے یہ بہت سے کینیڈینز کو سفر کی سہولت فراہم کرتی رہی  ہے۔ اس کے بند ہونے سے سفر کی سہولیات  پر بڑے پیمانے پر اثر پڑے گا۔ یہ فیصلہ دیہی اور دور دراز علاقوں کے لئے ایک یکساں دھچکا ہے۔ یہ خدمات طویل عرصے سے چھوٹی برادریوں اور بڑے شہروں کہ ساتھ جوڑنے والے نیٹ ورک کا حصہ رہی ہے ، جس نے اہم کارکنوں اور طلباء سے لے کر بوڑھوں تک ہر ایک کے لئے سستا اور باسہولت سفر کا ٹصور پیش کیا تھا۔ کینڈرک نے کہا ، " بس کمپنی ان دیہی راستوں کو برقرار رکھنے کے لئے فیئر باکس آمدنی پر انحصار کررہی ہے۔ جب مسافروں کی تعداد میں کمی واقع ہوتی ہے تو ہمیں فیصلہ کرنا ہوتا ہے۔ یا تو ہم تعدد کم کریں یا دیہی منڈیوں سے باہر نکل جاٸیں یا کچھ مدد تلاش کریں.
                  وبا سے کینیڈا کی انٹرسٹی بس انڈسٹری پر ایک پریشان کن اثر پڑا ہے۔ کوچ بس کمپنیوں نے مسافروں کی تعداد میں خطرناک حد تک کمی کی وجہ سے سروس فریکوٸنسی میں کمی کی ہے یا روٹس کو کم کیا ہے جس سے ملک کے ٹرانسپورٹ نیٹ ورک کے تباہ ہونے کا خطرہ ہے۔ جنوری میں ، میری ٹائمز سے تعلق رکھنے والے سینیٹرز نے وفاقی وزیر ٹرانسپورٹ عمر الغابرا کو ایک خط بھیجا جس میں اوٹاوا سے اس بس سروس کو مالی امداد فراہم کرنے کی اپیل کی گئی۔ کمپنی نے متنبہ کیا تھا کہ مالی اعانت کے بغیر اسے بہت سے روٹ ختم پڑیں گے