” ماہرین صحت نے کینیڈا سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ آسٹرا زینیکا کی کوویکس خوراکیں استعمال کریں یا انھیں واپس کر دیں“۔

” ماہرین صحت نے کینیڈا سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ آسٹرا زینیکا کی کوویکس خوراکیں استعمال کریں یا انھیں واپس کر دیں“۔

اوٹاوا -  صحت کے کچھ ماہرین کینیڈا کی جانب سے آکسفورڈ - آسٹرا زینیکا ویکسین کی ہزاروں خوراکیں لینے کے  فیصلے پر سوال اٹھا رہے ہیں ، تاکہ انہیں صرف اونٹاریو کے گودام میں فریزر میں رکھا جاسکے۔ آسٹرا زینیکا کی 655،000 سے زیادہ خوراکیں جمعرات کو کینیڈا نے وصول کیں۔ آسٹرا زینیکا ویکسین کے استعمال کے بعد اس کے  خطرناک اثرات مابعد جیسے کہ خون جمنے کی شکایت سامنے آنے کے بعد کچھ صوبوں نے اس کے بطور پہلی خوراک استعمال کو مسترد کردیا ہے۔
             میجر جنرل ڈینی فورٹین نے جو وفاقی حکومت کے لئے ویکسین کی تقسیم کا انتظام کر رہے ہیں ، جمعرات کو کہا کہ کینیڈا کی پبلک ہیلتھ ایجنسی ان خوراکوں کو بھیجنے کے لیۓ متعلقہ صوبوں کے آرڈر کا انتظار کر رہی ہے یعی جس صوبے کو جس مقدار میں یہ ویکسین درکار ہو اتنی مقدار کا آرڈر دے گا تبھی اں کو ویکسین بھیجی جاۓ لیکن اب بیشتر صوبوں نے آسٹرا زینیکا کو پہلی خوراک کے طور پر دینا بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور وہ ابھی تک اس بات پر غور کررہے ہیں کہ آیا اسے پہلی خوراک کے طور پر دیا جائے یا فائزر بائیو ٹیک یا موڈرنا ویکسینز کے استعمال کے بعد دوسری مرتبہ کی خوراک کے طور پہ دی جائے۔ ٹورنٹو میں ڈاکٹر عرفان ڈھلہ کا کہنا ہے کہ ان خوراکوں کو لے کے جمع کرنا فضول ہے۔ ان کا استعمال کرنے یا ان ممالک کو جہاں سے وہ آٸ ہیں انھیں واپس بھیجنے، دونوں میں سے کسی ایک  کا فوری طور پر انتخاب کرنا ہوگا۔